KEY POINTS:

  • If a person finds his Date Of Birth On Absher And Iqama Is Different, he should get an appointment and reach the Licensing Zonal Office, where the date of birth in the system will get corrected manually
  • JAWAZZAT said that the residences of private employees, including SAIK KHAS, cannot get transferred in the name of commercial establishments. 
  • Due to the coronavirus in Saudi Arabia, all the official timings are different from usual. So, it is necessary to make an advance appointment to contact government agencies. 

Read More: Getting Both Doses Of Vaccine Is Mandatory For Domestic Flights

What Is IQAMA?

Expats can only live in KSA if they have a native or citizen permit called “IQAMA” in the Saudi language. Saudi Iqama is for all the expats in Saudia. The Ministry of Labor and Jawazat charge fees for almost every service. Expats can pay through IQAMA funds in your account. Expat should renew his IQAMA in the given time. Otherwise, he will be in a severe problem as expire IQAMA means the person is staying illegally in KSA. The government of KSA issues IQAMA depending upon the work contract and type of work of an expat. But if due to some mishap or unfortunate, then you should be in a severe mess. There is no way to prove your residency or identity in KSA other than “IQAMA”.

Why Is IQAMA Important For Expats?

The Iqama contains some data composed on the ID card. It tells your name, DOB, expiry, and work-permit type and your profession. If you don’t want any trouble while living in KSA, you should have all the correct details on every document. If the authorities find some difference in any information on records, you will be in a complete mess.

What To Do If The Date Of Birth Of An Expat Is Different On Iqama And Absher?

IQAMA and the residency laws for foreigners in Saudi Arabia are clear, and everyone should follow them. There are also laws regarding employers and employers. It is essential to be aware of them.

One person asked a question on Twitter that “He has discovered his Date Of Birth On Absher And Iqama is different. How can this get corrected?”

JAWAZZAT replied to that question and said, “If a person found some mistake in information on ABSHER and IQAMA or his Date Of Birth On Absher And Iqama is different then he should get an appointment from the Licensing Zonal Office through Abshar Portal. One should approach the office at the appointed time. In-Office they will manually check Date Of Birth On Absher And Iqama and make corrections.”

Note: It is noticeable that due to the coronavirus in Saudi Arabia, all the official timings are different than usual. So, it is necessary to make an advance appointment to contact government agencies. 

MOI provided an ABSHER account facility to get advance time for queries and complaints. After taking a printout of the appointment or a mobile screenshot, reach the government agency at the booked time.

Remember that you do not need to have an account in Abshar to take advance time on the ABSHER portal. It is possible to get advance time through Abshar’s Home Patch even without registration.  

Transfer of Family Driver (SAIK KHAS) to another institution

A (family driver) residing in the country has asked, “Can his residence be transferred to an institution?” 

Read More: Who Will Be Eligible To Get Umrah Permits From 10th October?

Licensing sources said that the residences of private employees, including SAIK KHAS, cannot get transferred in the name of commercial establishments. 

As they get renewed through licenses, the residency of family drivers or janitors, maids, etc., is not subject to Labor Office fees. It is a restriction for personal residence holders that their occupations cannot get transferred to commercial establishments. 

What to do if you have a new Passport and previous one is stolen?

The JAWAZZAT said on his Twitter account that he can come to Saudi Arabia on a new passport that could come to the country, but that it must have a report of the loss of the old passport and other documents that could substantiate the claim. 

After the arrival in the country on a new passport, the person should make an appointment with the zonal office of licenses through the Abshar portal so that new passports can get entered into the system of licenses. 

Exit Re-Entry Visa Fees

Regarding the exit visa, one person said that he got the exit re-entry visa but did not use it and cancelled the visa within the stipulated time. In this case, the fee submitted for the exit promise can get used again

The licenses said that after the issuance of the exit visa, there is no way that you can get the fee refund even you did not use the exit visa or cancel it. However, you also cannot even re-use this fee for the next time

Read More: Ministry Of Health Of Saudi Arabia Announced The Changes In Tawakkalna Application After 10th October

IN URDU

اگر ایبشر اور اقامہ پر پیدائش کی تاریخ مختلف ہو تو ایک ایکسپیٹ کو کیا کرنا چاہیے؟


اہم نکات


اگر کسی شخص کی کوئ معلامات ایبشر اور اقامہ   غلطی پائی جاتی ہے تو وہ اپائنٹمنٹ لی کر لائسنسنگ زونل آفس جا سکتا ہے۔ جہاں نظام میں تاریخ پیدائش دستی طور پر درست ہو جائے گی
  جوازات نے کہا کہ نجی ملازمین کی رہائشیں بشمول سائیک خاص ، کمرشل اداروں کے نام پر منتقل نہیں ہو سکتیں۔
سعودی عرب میں کورونا وائرس کی وجہ سے تمام سرکاری اوقات معمول سے مختلف ہیں۔ لہذا ، سرکاری اداروں سے رابطہ کرنے کے لیے پیشگی ملاقات کرنا ضروری ہے۔


اقامہ کیا ہے؟


غیر ملکی صرف اس صورت میں سعودئ عرب میں رہ سکتے ہیں اگر ان کے پاس مقامی اجازت نامہ ہے. سعودی اقامہ ان تمام غیر ملکیوں کو دیا جاتا ہے جو ملک میں مقیم ہیں۔ وزارت محنت اور جوازت تقریبا ہر خدمت کے لیے فیس وصول کرتی ہے . جو آپ کے اکاؤنٹ میں اقامہ فنڈز کے ذریعے ادا کر سکتی ہے۔ ایکسپیٹ کو مقررہ وقت میں اپنے اقامہ کی تجدید کرنی چاہیے۔ بصورت دیگر ، وہ ایک شدید پریشانی میں مبتلا ہو جائے گا.اقامہ کی میعاد ختم ہونے کا مطلب ہے کہ وہ شخص غیر قانونی طور پر رہ رہا ہے۔

سعودی  حکومت اقامہ جاری کرتی ہے جس کا انحصار کام کے معاہدے اور ایکسپیٹ کے کام کی قسم پر ہوتا ہے۔ لیکن اگر کسی حادثے یا بدقسمتی کی وجہ سے  آپ کا اقامہ گم ہو جائ ، تو آپ کو شدید پریسشانی اور مشکلات کا سامنا کر پڑ سکتا ہے۔ چونکہ آپ کا اقامہ سعودی عرب میں آپ کا عارضی اجازت نامہ ہے اور اب آپ اسے کھو چکے ہیں. اقامہ کے علاوہ اب اپ کا سعودی میں اپنی رہائش یا شناخت ثابت کرنے کا کوئی طریقہ نہیں ہے۔


غیر ملکیوں کے لیے اقامہ کیوں ضروری ہے؟


اقامہ شناخت پر مشتمل کچھ ڈیٹا پر مشتمل ہے جو آپ کا نام ، DOB ، ایکسپائری ، اور ورک پرمٹ بتاتا ہے. آپ کا پیشہ بتاتا ہے اور یہ یقینی بنانا کہ آپ سعودی عرب میں کام کرتے ہیں اور رہتے ہیں۔ اگر آپ سعودی میں رہتے ہوئے کوئی پریشانی نہیں چاہتے ہیں تو ، آپ کو اپنی شناخت ثابت کرنے اور ملک میں رہنے کے لیے استعمال ہونے والی ہر دستاویز پر تمام درست تفصیلات ہونی چاہئیں۔ حکام کو ریکارڈ میں موجود کسی بھی معلومات میں کچھ فرق نظر آئے تو آپ مکمل گڑبڑ میں پڑ جائیں گے۔


اگر ایکسپیٹ کی پیدائش کی تاریخ اقامہ اور ایبشر پر مختلف ہے تو کیا کریں؟


  سعودی عرب میں غیر ملکیوں کے لیے رہائشی قوانین واضح ہیں ، اور ہر ایک کو ان پر عمل کرنا چاہیے۔  آجروں کے حوالے سے بھی قوانین موجود ہیں۔ ان سے آگاہ ہونا ضروری ہے۔
ایک شخص نے ٹویٹر پر دریافت کیا ہے کہ اقامہ اور ابشر پورٹل پر تاریخ پیدائش میں فرق ہے۔ یہ کیسے درست ہو سکتا ہے؟”


جوازات نے اس سوال کا جواب دیا اور کہا ، “اگر کسی شخص کو ایبشر اور اقامہ کے بارے میں معلومات میں کچھ غلطی نظر آئی تو اسے لائسنسنگ زونل آفس سے ابشر پورٹل کے ذریعے ملاقات کرنی چاہیے۔ اور  مقررہ وقت پر دفتر سے رجوع کرنا چاہیے ، جہاں تاریخ نظام میں پیدائش کو دستی طور پر درست کیا جائے گا۔ “


نوٹ: یہ قابل ذکر ہے کہ سعودی عرب میں کورونا وائرس کی وجہ سے تمام سرکاری اوقات معمول سے مختلف ہیں۔ لہذا ، سرکاری اداروں سے رابطہ کرنے کے لیے پیشگی ملاقات کرنا ضروری ہے۔
مینیسٹری نے سوالات اور شکایات کے لیے پیشگی وقت حاصل کرنے کے لیے ایبشر اکاؤنٹ کی سہولت فراہم کی۔ تقرری پرنٹ آؤٹ یا موبائل اسکرین شاٹ لینے کے بعد ، آپ بکنگ کے وقت سرکاری ایجنسی تک پہنچ سکتے ہیں۔
یاد رکھیں کہ ایبشر پورٹل پر پیشگی وقت لینے کے لیے آپ کو ابشر میں اکاؤنٹ رکھنے کی ضرورت نہیں ہے۔ ابشر کے ہوم پیچ کے ذریعے پیشگی وقت حاصل کرنا ممکن ہے یہاں تک کہ رجسٹریشن کے بغیر بھی۔


ملک میں رہنے والے ایک سائیک خاص (فیملی ڈرائیور) نے پوچھا ، “کیا فیملی ڈرائیور کا اقامہ کسی ادارے میں منتقل کیا جا سکتا ہے؟”


لائسنسنگ ذرائع نے بتایا کہ نجی ملازمین کی رہائشیں بشمول سائیک خاص ، کمرشل اداروں کے نام پر منتقل نہیں ہو سکتیں۔
چونکہ لائسنس کے ذریعے ان کی تجدید ہوتی ہے ، فیملی ڈرائیوروں یا چوکیداروں ، نوکرانیوں وغیرہ کی رہائش گاہ لیبر آفس کی فیس سے مشروط نہیں ہے۔ ذاتی رہائش گاہوں کے لیے یہ پابندی ہے کہ ان کے پیشے تجارتی اداروں میں منتقل نہیں ہو سکتے۔


پاسپورٹ کے بارے میں ، ایک شخص نے دریافت کیا کہ چھٹی کے دوران اس کا پاسپورٹ چوری ہو گیا۔ نیا پاسپورٹ حاصل کرنے کے بعد میں ملک کیسے آ سکتا ہوں؟


جوازات نے اپنے ٹوئٹر اکاؤنٹ پر کہا کہ وہ نئے پاسپورٹ پر سعودی عرب آسکتا ہے، لیکن اس کے پاس پرانے پاسپورٹ کے ضائع ہونے کی رپورٹ اور دیگر دستاویزات ہونی چاہئیں جو دعوے کو ثابت کرسکیں۔
نئے پاسپورٹ پر ملک میں آنے کے بعد ، شخص کو لائسنس کے زونل آفس کے ساتھ ابشر پورٹل کے ذریعے ملاقات کرنی چاہیے تاکہ نئے پاسپورٹ لائسنس کے نظام میں داخل ہو سکیں۔


ایگزٹ ویزا کے حوالے سے ایک شخص نے بتایا کہ اسے ایگزٹ ری انٹری ویزا مل گیا لیکن اس کا استعمال نہیں کیا اور مقررہ وقت میں ویزا منسوخ کر دیا۔ اس صورت میں، فیس دوبارہ استعمال ہو سکتی ہے؟


جوازات نے کہا کہ ایگزٹ ویزا کے اجراء کے بعد ، کوئی طریقہ نہیں ہے کہ آپ فیس کی واپسی حاصل کر سکیں یہاں تک کہ آپ نے ایگزٹ ویزا استعمال نہیں کیا یا اسے منسوخ نہیں کیا۔ تاہم ، آپ اگلی بار اس فیس کو دوبارہ استعمال بھی نہیں کر سکتے۔

Read More: An Expat Guide To Huroob

Similar Posts

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *